مذہب کی بنیاد پر امتیازی سلوک برداشت نہیں، ہندو برادری کو ہولی کی مبارکباد

اسلام آباد: ( ٹیسکو نیوز) وزیر اعظم محمد نواز شریف نے ہولی کے موقع پر اپنے پیغام میں کہا ہے کہ ہولی کا تہوار موسم کی تبدیلی اور بہار کی آمد کا اعلان ہے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ اس تہوار میں امید کا پیغام ہے، وہ امید جو ہمیں ایک بہتر مستقبل کی خبر دیتی ہے۔ وزیر اعظم نے مزید کہا کہ ہولی اس بات کی نوید ہے کہ موسم سرما بہار میں بدلتا ہے، اسی طرح معاشروں کے حالات بھی تبدیل ہوتے ہیں۔وزیر اعظم نے مزید کہا کہ عوام کو فسادیوں کے ہاتھوں خطرات کا سامنا کرنا پڑا، پاکستان کی اقلیتیں بھی اس سے متاثر ہوئیں، اسلام کے نام کو استعمال کرنا افسوسناک ہے، اسلام ایک انسان کے قتل کو پوری انسانیت کا قتل قرار دیتا ہے۔وزیر اعظم نے واضح کیا کہ اس بات کو یقینی بنایا جائے گا کہ کسی کے ساتھ مذہب کی بنیاد پر کوئی امتیازی سلوک نہ کیا جائے اور سب کو اپنے مذہب پر عمل کرنے کی پوری آزادی ہو۔ وزیر اعظم نے یہ بھی بتایا کہ اقلیتوں کو ملازمتوں اور دوسرے معاملات میں کسی محرومی کا احساس نہ ہو۔انہوں نے مزید کہا کہ ہولی کا تہوار ہمیں یہ سکھاتا ہے کہ یہ نیکی ہے جو باقی رہے گی اور بدی کو لازماً شکست ہو گی۔ وزیر اعظم پاکستان نے ہندو برادری کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے ان کے ساتھ اظہارِ یکجہتی کیا۔