عمران خان کا انتخابی اصلاحات سمیت 10 مطالبات پیش کرنے کا اعلان

لاہور( ٹیسکو نیوز) تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے حسین حقانی کے انکشافات کو غداری قرار دیتے ہوئے کہا کہ حسین حقانی ہو، میمو گیٹ یا نیوز لیکس یہ فوج کو بدنام کرنے کی سازش ہیں، پاناما کیس کے فیصلے کے بعد نیا دور شروع ہو گا، آصف زرداری نے نیب کو درست دھمکی دی ہے۔ صوبائی دارالحکومت کے ایئرپورٹ پر میڈیا نمائندوں سے بات کرتے ہوئے عمران خان حسین حقانی کے انکشافات، میمو گیٹ اور نیوز لیکس کے معاملات پر برہم نظر آئے۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ حسین حقانی نے وہی بات کی ہے جو نیوز لیکس میں کی گئی، سیاست دانوں کی پرانی عادت ہے کہ یہ امریکہ اور بھارت کو خفیہ پیغام دیتے ہیں کہ ہم تو آپ کے ساتھ ہیں لیکن فوج خلاف ہے۔عمران خان کا کہنا تھا کہ اپنی فوج کو بدنام نہ کیا جائے، اگر مسائل ہیں تو فوج سے بات کی جائے۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ نیب نواز شریف کا آلہ کار ہے، آصف زرداری نے درست دھمکی ہے۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ پاناما کیس کے فیصلے کے بعد نیا دور شروع ہو گا۔عمران خان نے قطری بزنس پارٹنر کو دو سو ارب کا پورٹ قاسم کا ٹھیکہ دینے پر عدالت میں جانے کا اعلان کیا اور کہا کہ شریف خاندان کے لئے منی لانڈرنگ کرنے والے سعید احمد کو نیشنل بنک کا صدر بنا دیا گیا ہے۔بعد ازاں لاہور میں سینئر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان نے انتخابی اصلاحات سمیت 10 مطالبات پیش کرنے کا اعلان بھی کیا، کہتے ہیں منظوری تک الیکشن نہیں ہونے دیں گے۔ عمران خان نے مزید کہا کہ پاناما کے معاملے پر کمیشن بنا تو یقینی بنائیں گے کہ وزیر اعظم عہدے پر نہ ہوں۔