سندھ ہائیکورٹ سے شرجیل میمن کی ضمانت منظور

کراچی (دنیا نیوز ) الزام پر کوئی گناہ گار نہیں ہوجاتا ، ڈاکٹر عاصم کی رہائی کو ڈیل قرار دینے والوں کیلئے شرمناک بات ہے : میڈیا سے گفتگو
سندھ کے سابق وزیر اطلاعات شرجیل میمن کا کہنا ہے ڈاکٹر عاصم کی کورٹ سے رہائی کو ڈیل کہنے والوں کو شرم آنی چاہیئے ، وزیر داخلہ کھل کر سامنے آئیں ، اداروں کے پیچھا چھپنا چھوڑیں ، وفاق نے جس کی لاٹھی اس کی بھینس کا قانون نافذ کر رکھا ہے ۔ شرجیل میمن نے ایک بار پھر مودبانہ انداز اختیار کرتے ہوئے وزیر داخلہ کو مناظرے کا چیلنج بھی دے دیا ۔ سندھ ہائیکورٹ سے دو مقدمات میں عبوری ضمانت منظور ہونے کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے شرجیل میمن نے عمران خان اور وزیر داخلہ پر تنقید کے زہریلے نشتر چلاتے ہوئے خوب دل کی بھڑاس نکالی ۔ پہلے تو انہوں نے عمران خان کا نام لئے بغیر انہیں لتاڑا اور کہا ڈاکٹر عاصم کی کورٹ سے رہائی کو ڈیل کہنے والوں کو شرم آنی چاہیئے ۔ عمران خان پر تنقید کے بعد شرجیل میمن نے اپنی توپوں کا رخ وزیر داخلہ چودھری نثار کی طرف کر دیا ، ان کا کہنا تھا کہ چودھری نثار شہباز شریف کے نقش قدم پر چل رہے ہیں ، 90 کی دہائی کی سیاست نہیں چلے گی ۔ انہوں نے کہا ملک میں بدمعاشی چل رہی ہے ، وہ مقدمات سے خوفزدہ ہوتے تو پاکستان ہی نہ آتے ، شرجیل میمن نے ایک بار پھر مودبانہ انداز اختیار کرتے ہوئے وزیر داخلہ کو مناظرے کا چیلنج بھی دے دیا ۔