روس نے امریکی حملے کو خودمختار ریاست کے خلاف جارحیت قرار دے دیا ، شام کی امریکی میزائل حملوں کی سخت مذمت

(ٹیسکونیوز) روسی صدر اور شام نے امریکی میزائل حملوں کی سخت مذمت کرتے ہوئے اسے خودمختار ریاست کے خلاف جارحیت قرار دے دیا ہے شام نے امریکی میزائل حملوں کی سخت مذمت کرتے ہوئے اسے خودمختار ریاست کے خلاف جارحیت قرار دے دیا جبکہ روسی صدر کے ترجمان دمیتری پیسکوف کا کہنا تھا کہ یہ ایک خودمختار ریاست کے خلاف جارحیت ہے۔شامی حکام کے مطابق حکومت کے زیر کنٹرول ایئر بیس پر ہونے والا حملہ بھاری نقصان کا سبب بنا۔شام کے صوبے حمص کے گورنر طلال برازی کا خبر رساں ادارے اے پی سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ان حملوں کا مقصد زمین پر موجود دہشت گردوں کی حمایت ہے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ حملوں کے بعد ایئر بیس پر لگنے والی آگ 2 گھنٹے تک بھڑکتی رہی جس کے بعد اس پر قابو پایا گیا۔دوسری جانب شامی حزب اختلاف گروہ نے امریکی حملے کا خیر مقدم کرتے ہوئے اسے شام میں جاری حکومتی بے خوفی کے خاتمے کی نوید قرار دیا۔امریکی حمایتی باغی کمانڈر میجر جمیل الصالح نے امید ظاہر کی کہ حکومتی ایئربیس پر امریکی حملہ چھ سالہ خانہ جنگی کی صورتحال میں ایک اہم موڑ ثابت ہوگا۔