انگلینڈ کے خلاف آئی سی سی ویمن چیمپئن شپ کے لیے قومی ٹیم کا اعلان

لاہور :قومی خواتین کرکٹ ٹیم کی سلیکشن کمیٹی نے انگلینڈ کے خلاف ایک روزہ اور ٹی ٹونٹی سیریز کے لیے حتمی سکواڈ زکا اعلان کردیا ہے۔دونوں فارمیٹ کے لیے15،15 خواتین کھلاڑیوں کا اعلان کیا گیا ہے۔

عروج ممتاز کی سربراہی میں قائم کردہ سلیکشن کمیٹی نے بنگلہ دیش کے خلاف ایک روزہ اور ٹی ٹونٹی سکواڈز میں 4،4تبدیلیاں کی ہیں۔ دائیں ہاتھ کی بیٹر کائنات حفیظ اور آف سپنر رامین شمیم کو پہلی بار قومی ایک روزہ خواتین کرکٹ ٹیم میں شامل کیا گیا ہے جبکہ ندا ڈار اور انعم امین کی ایک روزہ اسکواڈ میں واپسی ہوئی ہے۔
چاروں کھلاڑیوں کو ارم جاوید، کائنات امتیاز، سعدیہ اقبال اور ثناءمیر کی جگہ ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔دوسری جانب بنگلہ دیش کے خلاف ایک روزہ سیریز میں ڈیبیو کرنے والی 15 سالہ اسپنر عروب شاہ کو پہلی بار قومی خواتین ٹی ٹونٹی کرکٹ ٹیم میں شامل کرلیا گیا ہے۔آسٹریلیا میں بگ بیش لیگ کھیلنے والی پہلی پاکستانی خاتون کرکٹر ندا ڈارکی ٹی ٹونٹی سکواڈ میں بھی واپسی ہوگئی ہے۔

بنگلہ دیش کے خلاف سیریز کے دوران اے سی سی ایمرجنگ ویمنز ٹیمز ایشیا کپ میں شرکت کی غرض سے بنگلہ دیش میں موجود فاطمہ ثناءاور رامین شمیم کوبھی انگلینڈ کے خلاف ٹی ٹونٹی سیریز کے لیے قومی ویمنز اسکواڈ میں شامل کرلیا گیاہے۔

حتمی سکواڈ کے اعلان سے قبل قومی خواتین کرکٹ ٹیم کا تربیتی کیمپ 21 نومبر سےحنیف محمد ہائی پرفارمنس سنٹر کراچی میں جاری ہے۔پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان تین ایک روزہ اور تین ٹی ٹونٹی میچوں پر مشتمل سیریز 9 سے 20 د سمبر تک ملائیشیا میں جاری رہے گی۔

تمام میچز کنرارا اوول ، کوالالمپور میں کھیلے جائیں گے۔ سیریز میں شامل 3 ایک روزہ میچز آئی سی سی ویمنز چیمپن شپ کا حصہ ہیں۔ 8 ٹیموں پر مشتمل آئی سی سی ویمنز چیمپئن شپ کے پوائنٹس ٹیبل پر پانچویں پوزیشن پر موجود قومی خواتین کرکٹ ٹیم کا مقابلہ دوسرے نمبر پر موجود انگلینڈ کی ٹیم سے ہے۔

پاکستان ایک روزہ سیریز میں انگلینڈ کو شکست دے کر نیوزی لینڈ میں شیڈول آئی سی سی ویمنز ورلڈکپ 2021 میں براہ راست رسائی حاصل کرسکتا ہے۔آئی سی سی ویمنز چیمپئن شپ میں اب تک 15 میچز میں پاکستان 7میں کامیابی حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ1 میچ برابر کرچکا جبکہ 7 میچوں میں قومی خواتین ٹیم کو شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

آئندہ سال مکمل ہونے والی چیمپئن شپ کے پہلے مرحلے کے اختتام پر چار بہترین ٹیموں کو ورلڈکپ میں براہ راست رسائی ملے گی۔عروج ممتاز کاکہنا ہے کہ قومی اوربین الاقوامی کرکٹ میں کھلاڑیوں کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے بعد اسکواڈز کو حتمی شکل دی گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ انگلینڈ کے خلاف سیریز کبھی بھی آسان نہیں ہوتی اور اسی بات کو مدنظر رکھتے ہوئے ٹیم تیارکی گئی ہے۔عروج ممتاز نے کہا کہ خواتین کھلاڑیوں کے پول میں اضافے کے سبب ٹیم سلیکشن میں وقت لگا۔ انہوں نے کہا کہ کئی کھلاڑیوں کو پہلی بار سکواڈ کا حصہ بنایاگیا ہے۔عروج ممتاز نے کہا کہ پاکستان خواتین کرکٹ ٹیم ،آئی سی سی ویمنز چیمپن شپ میں بہتر کارکردگی کا تسلسل برقرار رکھے گی۔

انہوں نے کہا کہ بنگلہ دیش کے خلاف سیریز میں عمدہ کارکردگی کے باعث قومی کھلاڑیوں کے اعتماد میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ انگلینڈ کیخلاف ایک روزہ سیریزکیلئے کھلاڑیوں میں بسمعہ معروف (کپتان)، عالیہ ریاض، انعم امین، عروب شاہ، ڈیانا بیگ، فاطمہ ثناء،جویریہ خان،کائنات حفیظ، ناہیدہ خان، نشرہ سندھو، ندا ڈار، ، عمیمہ سہیل، رامین شمیم، سدرہ امین اور سدرہ نوازشامل ہیں جبکہ ٹی ٹونٹی سیریز کیلئے بسمعہ معروف (کپتان)، عالیہ ریاض، انعم امین، عروب شاہ،عائشہ ظفر، ڈیانا بیگ، فاطمہ ثناء،ارم جاوید، جویریہ خان، ناہیدہ خان، ندا ڈار، ، عمیمہ سہیل، رامین شمیم،سعدیہ اقبال اور سدرہ نواز شامل ہیں۔

شیڈول کے مطابق پہلا ایک روزہ میچ 9 دسمبر، دوسرا میچ 12 دسمبر، تیسرا میچ14 دسمبر جبکہ پہلا ٹی ٹونٹی میچ 17دسمبر، دوسرا ٹی ٹونٹی میچ 19 دسمبر، تیسرا ٹی ٹونٹی میچ 20 دسمبر بمقام کنرارا اکیڈمی اوول میں کھیلیں جائیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں