شعیب اختر کی وزیراعظم عمران خان سے ملک بھرمیں کرفیو لگانے کی درخواست

پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق فاسٹ بولر شعیب اختر نے وزیراعظم عمران خان سے پنجاب کو بھی لاک ڈاﺅن کرنے کی درخواست کر دی۔سوشل میڈیا پر اپنے یوٹیوب اکاونٹ پر ویڈیو پیغام میں راولپنڈی ایکسپریس شعیب اختر نے کہا کہ صفائی نصف ایمان تھا جس کو ہم بھول گئے، کورونا وائرس کے بعد سب کو یاد آ گیا کہ صفائی نصف ایمان ہے، اب صورت حال یہ ہے کہ بڑھتے کیسز کو دیکھتے ہوئے پاکستان کو کورونا وائرس کی کیٹگری ٹو میں ڈال دیا گیا ہے۔
شعیب اختر نے کہا کہ کورونا وائرس ہوا میں رہتا ہے، یہ سوچنا بند کر دیں کہ گرمی پڑے گی تو وائرس بھی ختم ہو جائے گا، ابھی تک تو اس کی ویکسین بھی نہیں نکلی، میری وزیراعظم سے درخواست ہے کہ وہ فوری طو رپر ملک کو لاک ڈاﺅن کر دیں، اٹلی نے لاک ڈاﺅن کرنے میں بڑی دیر کر دی تھی، اب وہاں پر پانچ ہزار سے زائد لوگ مر چکے ہیں، کیسز مزید بڑھتے جا رہے ہیں، وزیراعظم سے کہوں گا کہ لوگ بات سننے کے لئے تیار نہیں، پلیز آپ ملک بھر میں کرفیو لگائیں، شہریوں کو ایک گھنٹہ دیں جس میں شہری جا کر راشن خرید سکیں۔

44 سالہ شعیب اختر نے حکومت کو ایران کے ساتھ بارڈر بھی بند کرنے کا مشورہ دیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں