راولپنڈی چیمبر آف کامرس کا سٹیٹ بنک پیکج کا خیرمقدم

راولپنڈی چیمبر آف کامرس کے صدر صبور ملک نے کہا ہے کہ سٹیٹ بنک کی جانب سے اعلان کردہ پیکج قابل ستائش ہے تاہم اس کا دائرہ کار کارپوریٹ سیکٹراور انڈسٹری تک بھی بڑھایا جائے۔ مجوزہ پیکج سے فائدہ کنزیومر سیکٹر کو ہو گا۔ پیداواری شعبہ پہلے ہی مشکلات اور گراوٹ کا شکار ہے ۔
امپورٹ اور ایکسپورٹ بھی مکمل بند ہے۔ ایسے میں صنعتی شعبے کو مارک اپ کی ادائیگیوں کے ساتھ ساتھ سٹاف کو تنخواہ بھی دینا ہوتی ہے۔ کرونا وائرس کے پیش نظر سپلائی چین بھی متاثر ہوئی ہے، رمضان المبارک کی آمد قریب ہے ایسے میں لاک ڈاون کی صورتحال سے پیداوار، کھیت سے منڈی تک سپلائی اور صارف تک اشیاء کی فراہمی کو ہر دوسرے مرحلے پر رکاوٹوں کا سامنا ہے۔

کئی صنعتی اور پیداواری یونٹس کو ڈیفالٹ کا سامنا ہے۔ گورنر سٹیٹ بنک رضا باقر سے اپیل کرتے ہوئے صدر چیمبر صبور ملک نے کہا کہ قرضوں کی اقساط موخر کی جائیں اور مارک اپ معاف کیا جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ مارچ کے افراط زر کے اعدا د و شمار کے مطابق مہنگائی میں سالانہ اضافہ میں کمی آئی ہے۔ سٹیٹ بنک شرح سود کو مزید نیچے لے آئے۔ اسے جلد از جلد سنگل ڈیجٹ تک لایا جائے۔ اس کے ساتھ ساتھ روپے کی قدر کو موثر انداز میں مانیٹر کیا جائے بصورت دیگر مہنگائی میں پھر اضافہ ہو جائے گا۔