پاکستان کی پانچویں مردم شماری 1998ء میں ہوئی

لاہور: (جیوعوام) پاکستان میں پانچویں مردم شماری 19 سال پہلے 1998ء میں ہوئی تھی۔ اس وقت پاکستان کی آبادی 13 کروڑ سے زائد، شرح خواندگی 44 فیصد اور بیروزگاری کی شرح 19 فیصد تھی۔
1998ء میں کی گئی مردم شماری کے مطابق پاکستان کی آبادی 13 کروڑ 23 لاکھ 52 ہزار تھی جن میں مردوں کی تعداد 52 فیصد جبکہ خواتین 48 فیصد تھیں۔ پانچویں مردم شماری کے مطابق پاکستان میں فی مربع کلومیٹر 166 بستے تھے۔ شرح خواندگی تقریبا 44 فیصد اور معاشی طور پر متحرک آبادی 22.24 فیصد تھی۔
پانچویں مردم شماری کے وقت ملک میں بیروزگاری کی شرح 19.68 فیصد تھی۔ معذور افراد کی تعداد 2.54 فیصد، کل آبادی میں پندرہ سال سے کم عمر بچوں کی تعداد 43 فیصد، پندرہ سے چونسٹھ سال تک کے افراد کی تعداد 53 فیصد اور معمر افراد کی تعداد ساڑھے تین فیصد تھی۔ 1981ء سے 1998ء تک سالانہ شرح نمو 2.69 فیصد تھی۔
1998 کی مردم شماری کی بنیاد پر بلدیاتی الیکشن اور قومی و صوبائی اسمبلیوں کیلئے نئی حلقہ بندیاں کی گئیں۔ 2000ء میں بلدیاتی الیکشن اور 2002ء کے عام انتخابات نئی حلقہ بندیوں کی بنیاد پر ہوئے۔