سپاٹ فکسنگ میں معطل کرکٹرز کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کی منظوری

اسلام آباد: ( ٹیسکو نیوز) سپاٹ فکسنگ میں ملوث کرکٹرز کے نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ (ای سی ایل) میں ڈالنے کی منظوری دیتے ہوئے وفاقی وزیر داخلہ نے بکیوں کیخلاف بھی سخت کارروائی کا حکم دے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر داخلہ چودھری نثار علی خان کے زیر صدارت اعلیٰ سطح اجلاس میں سپاٹ فکسنگ میں معطل کرکٹرز کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کی منظوری دے دی گئی ہے۔ ای سی ایل میں ڈالے جانے والے کھلاڑیوں میں شرجیل خان، خالد لطیف، ناصر جمشید، شاہ زیب حسن خان اور محمد عرفان کے نام شامل ہیں۔ وزیر داخلہ نے حکم دیا کہ سپاٹ فکنگ میں ملوث کھلاڑیوں کے ساتھ ساتھ ان بکیز کے خلاف بھی کارروائی کی جائے۔

ایف آئی اے حکام نے وزیر داخلہ کو بریفنگ کے دوران بتایا کہ خالد لطیف اور محمد عرفان نے ایف آئی اے کو اپنے بیانات ریکارڈ کرا دیے ہیں۔ دیگر کھلاڑیوں کے بیانات کل ریکارڈ کیے جائیں گے۔ اس موقع پر وزیر داخلہ کا سپاٹ فکسنگ کے معاملے پر سخت غم وغصے کا اظہار کرتے ہوئے کہنا تھا کہ پاکستان کا نام بدنام کرنے والوں کو قانون کے کٹہرے میں لایا جائے اور سپاٹ فکسنگ معاملے کی ہر پہلو سے شفاف اور غیر جانبدارانہ تحقیقات کی جائیں۔ کسی بھی ملوث شخص کے ساتھ کسی قسم کی رعایت نہ برتی جائے۔ معاملے کی تفتیش میں زیرو ٹالرنس پالیسی اختیار کی جائے۔ اس موقع پر وزیر داخلہ نے پی ٹی اے کو ہدایات جاری کی کہ جوا لگانے اور اس کو فروغ دینے والی تمام ویب سائٹس بھی بند کی جائیں۔