وزیر اعظم اور مریم کی کوششوں سے گونگی بہری بچی کا کامیاب آپریشن

اسلام آباد ( جیوعوام ) جنوری میں وزیر اعظم نے قوت سماعت و گویائی سے محروم ندا خان کے علاج کا ذمہ لیا ، سرجری کے بعد ندا سننے لگی ہے جلد بولنا بھی شروع کر دے گی وزیر اعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کی کوششوں سے غریب بچی کی زندگی بدل گئی ۔ قوت سماعت سے محروم بچی ندا خان نے علاج کے بعد وزیر اعظم نواز شریف سے ملاقات کی اور علاج میں مدد کرنے پر ان کا شکریہ ادا کیا ۔ تین ماہ قبل ننھی ندا نے ایک تقریب میں وزیر اعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کی محبت و پیار کچھ اس طرح پایا کہ آج اس کی زندگی ہی بدل گئی ۔ رواں سال 11 جنوری کی صبح وزیر اعظم نواز شریف اسلام آباد کے سیکٹر ایچ نائن میں خصوصی بچوں کے سکول آئے تو ان کا استقبال دمکتی آنکھوں والی ایک اجلی ، نکھری اور معصوم ننھی پری نے اپنے جدا گانہ انداز میں کچھ اس ادا سے کیا کہ وزیر اعظم اور ان کی بیٹی مریم نواز بے ساختہ اس بچی کو اٹھا کر اپنے ساتھ سٹیج پر لے گئے اور خوب پیار کیا ۔ سکول کو بسوں کا تحفہ دینے کیلئے آنے والے وزیر اعظم اور مریم نواز کی محبت نے قوت سماعت و گویائی سے محروم ساڑھے 6 سالہ ندا خان کی زندگی ہی بدل دی ۔ وزیر اعظم نے کے جی ون کی طالبہ ندا خان کے علاج کا ذمہ لیا ، ندا کا علاج سی ڈے اے ہسپتال میں پاکستانی اور برطانوی ڈاکٹروں نے مل کر کیا ، پہلے ایک سرجری ہوئی پھر کانوں میں ڈیوائس لگائی گئی ۔ سرجری کے بعد ندا کو اسلام آباد کے مضافاتی علاقے بارہ کہو میں اس کے گھر منتقل کر دیا گیا ۔ منگل کے روز ایک طویل انتظار کے بعد وزیر اعظم ہاؤس میں ندا کو ڈیوائس لگا دی گئی ۔ ندا کی بے آواز دنیا میں پہلی آواز اس وقت گونجی جب وزیر اعظم نے اس کی ڈیوائس کا سوئچ آن کیا ۔ ندا اب سننے لگی ہے مگر ایک پڑاؤ ابھی باقی ہے ندا کو ابھی بولنا بھی ہے ، اس کی سپیچ تھراپی پمز میں کی جائے گی ۔ معالجین کے مطابق ندا خان کی قوت گویائی بتدریج مکمل بحال ہو جائے گی ۔