پنجاب بھر کے تعلیمی اداروں میں گرمیوں کی تعطیلات قبل از وقت کرنے کا فیصلہ

کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے خطرات کو مدنظر رکھتے ہوئے وزیر اعلیٰ پنجا ب عثمان بزدار کی جانب سے صوبے بھر کے تعلمی اداروں میں قبل از وقت تعطیلا ت کا اعلان کر دیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق آج پنجاب کابینہ کا اجلاس ہوا ہے جس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ تعلمی اداروں میں تعطیلات وقت سے پہلے دی جائیں گی ۔
اعلانیہ میں بتایا گیا ہے کہ تمام تعلیمی ادارے 31 مئی تک بند رہیں گے۔ اس دورانئے میں بچوں کی فیس آدھی لی جائے گی جبکہ اساتذہ کو پوری تنخواہ دی جائے گی۔ یہ فیصلہ پنجاب کابینہ کے اجلاس میں کیا گیا ہے جس کی منظوری خود عثمان بزدار نے دی ہے۔ یاد رہے کہ ملک میں کورونا وائر س کے بڑھتے ہوئے خطرات کو مدنظر رکھتے ہوئے اس سے پہلے پنجاب بھر میں لاک ڈاؤن کا اعلان کیا گیا تھا جس پر آج سے عمل کیاجا رہا ہے۔

پنجا ب کے علاوہ سندھ اور خیبرپختونخواہ حکومت کی جانب سے بھی لاک ڈاؤن کر دیا گیا تھاجس کے بعد اب ملک میں فوج طلب کر لی گئی ہے تا کہ عوام کو گھروں تک محدود رکھا جائے۔ یاد رہے کہ دنیا بھر میں تباہی مچانے والے کورونا وائرس نے اب پاکستان میں اپنے قدم جما لئے ہیں جس کے بعد اس کی تباہی کا سلسلہ جاری ہے۔ ابھی تک پاکستان میں 892 افراد کورونا وائرس کا شکار ہوگئے ہیں جبکہ 7 افراد کورونا وائرس کا شکار ہوکر ہلاک ہو چکے ہیں۔
وجودہ صورتحال پر پریس کانفرنس کرتے ہوئے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے اس بات کی تصدیق کر دی ہے کہ پاکستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 89 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جس کے بعد اب ملک بھر میں متاثرہ افراد کی تعداد 892 ہو گئی ہے جبکہ 5کی حالت تشویش ناک بتائی گئی ہے۔ اسی پر مزید بات کرتے ہوئے ڈاکٹر ظفر مرزا کا کہنا تھا کہ سخت اقدامات اسی لئے کئے جا رہے ہیں تا کہ ہماری عوام کو ہر قسم کا تحفظ فراہم کیا جائے۔ انہی خطرات کو مدنظر رکھتے ہوئے اب پنجاب حکومت کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ تمام تعلیمی ادارے 31 مئی تک بند رہیں گے۔ اس دورانئے میں بچوں کی فیس آدھی لی جائے گی جبکہ اساتذہ کو پوری تنخواہ دی جائے گی۔