کرونا وائرس جیسی وبائی آفت سے نمٹنے کیلئے وفاقی اور صوبائی حکومتیں بروقت اقدامات کررہی ہیں۔ایس ایم منیر

یونائٹیڈ بزنس گروپ(یو بی جی)کے سرپرست اعلیٰ ایس ایم منیر اورسیکریٹری جنرل زبیرطفیل نے کہا ہے کہ کرونا وائرس جیسی وبائی آفت سے نمٹنے کیلئے وفاقی اور صوبائی حکومتیں بروقت اقدامات اور موثر حکمت عملی کررہی ہیں جبکہ سندھ حکومت کی جانب سے فوری توجہ دیئے جانے کے سبب کرونا وائرس سے جانی نقصان کم ہو اہے، امید ہے کہ جلد ہی اس آفت سے چھٹکارا پالیا جائے گا، شہریوں کی ذمہ داری ہے کہ وہ اس صورتحال کی سنگینی کا ادراک کرتے ہوئے خود کو گھروں میں محدود رکھیں، سماجی تعلقات میں بھی فاصلے رکھیں اورہرفردہر ممکن حد تک حفاظتی انتظامات کرے، عوامی مقامات اور رش کی جگہوں پر جانے سے گریز کیا جائے کیونکہ کورونا وائرس سے ایک شخص ہی نہیں بلکہ ایک خاندان اور ایک حلقہ متاثر ہوتا ہے۔

ایس ایم منیر نے کہا کہ مصیبت کی اس گھڑی میں کراچی سمیت ملک بھر کے عوام اپنے اندر ایثار اور قربانی کا جذبہ پیدا کریں تاکہ کرونا وائرس جیسی وبائی آفت سے نمٹا جاسکے کیونکہ کرونا وائرس نے پوری دنیا کے نظام کو تباہ کردیا ہے، معیشت زمین بوس ہوگئی ہیں، انسانی جانوں کا بے پناہ نقصان ہورہا ہے،کاروبار کی بندش سے روزمرہ مزدوری کرنے والے بے روزگار ہوچکے ہیں اور ان کے گھروں میں فاقہ کشی تک نوبت آچکی ہے، ان حالات میں این جی اوز اپنا کردار بہتر طور پر ادا کریں ۔
انہوں نے کہا کہ بزنس کمیونٹی ہر ممکن حد تک وفاقی اور صوبائی حکومتوں سے تعاون کررہی ہے لیکن جو این جی اوز سوشل میڈیا کے ذریعہ راشن تقسیم کرنے کے دعوے کررہی ہیں ان میں سے بیشتر کے دعوے غلط ثابت ہوئے ہیں لہٰذا مخیرحضرات اپنے طور پر غریبوں کی مدد کریں۔زبیرطفیل نے کہا کہ کرونا وائرس کو امریکا، یورپ ، مڈل ایسٹ اور ایشیاء کی طاقتور ترین ممالک بھی قابو نہیں کرپائے ہیں، اس کا صرف حل زیادہ سے زیادہ احتیاطی تدابیراختیار کرنا ہے،لوگ اپنے اطراف ضرورت مندوں کی مدد کریں، صحیح وقت پر صحیح فیصلے عوام کو قومی سانحے سے بچا سکتے ہیں، یہ وقت سب کو ایک قوم کی طرح ساتھ لے کر چلنے کا ہے، کرونا جیسے وائرس سے بچنے کیلئے ضروری ہے کہ ہم گھروں میں رہیں اور اگر گھروں سے نہیں نکلیں گے تو کرونا ہمارے گھروں میں داخل نہیں ہوگا، ہمیں اس طبقے کا بھی احساس ہے جو اس مشکل وقت سے گزر رہا ہے، یہ مصیبت کا وقت ہے ٹل جائیگا۔