سعودی عرب میں کورونا کے 493نئے کیسز سامنے آگئے، مزید 6مریض جان کی بازی ہار گئے

سعودی عرب میں کورونا کے 493نئے کیسز سامنے آگئے ہیں جبکہ مزید 6مریض جان کی بازی ہار گئے۔ تفصیلات کے مطابق سعودی عرب میں کورونا کے 493نئے کیسز سامنے آنے کے بعد مملکت میں کورونا کے مجموعی کیسز کی تعداد 5ہزار 862ہوگئی ہے جبکہ جاں بحق ہونے والے افراد کی مجموعی تعداد 79 ہوگئی ہے۔ اس کے علاوہ 59 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔
مملکت میں اب تک 931 افراد صحتیاب ہوکر گھروں کو جاچکے ہیں جس کے بعد ایکٹو کیسز کی تعداد 4ہزار 852رہ گئی ہے۔ ملک میں اب تک ڈیڑھ لاکھ سے زائد ٹیسٹس کیے جاچکے ہیں۔ مملکت کے دارالحکومت الریاض میں کرونا وائرس کے ٹیسٹوں کے بعد 114 نئے کیس سامنے آئے، مکہ مکرمہ میں 111 ، الدمام میں 69 ،مدینہ منورہ میں 50 اور جدہ میں 46 نئے کیسوں کی تصدیق کی گئی ہے۔

الہفوف میں 16 ، بریدہ میں 10 اور ظہران میں سات کیسوں سمیت مملکت کے دوسرے شہروں میں بھی ایک،ایک دو، دو افراد اس مہلک وًبا کا شکار ہوئے ۔وزارت صحت کے ترجمان محمد العبد العالی نے کہا کہ کرونا وائرس سے وفات پانے والے تمام آٹھ افراد مکین ہیں اور ان کے سوگوار خاندانوں اور پیاروں کو تعزیتی پیغامات بھیج دیے گئے ہیں۔ انھوں نے کہا ہے کہ ابھی تک ایسے کوئی شواہد سامنے نہیں آئے ہیں کہ گرم موسم کرونا وائرس پر کیسے اثرانداز ہوگا۔
انھوں نے عوام سے کہا کہ وہ افواہوں پر کان دھرنے سے گریز کریں۔انھوں نے کہا کہ لاک ڈاؤن کا خاتمہ قبل از وقت ہوگا اور اس کے منفی اثرات ہوسکتے ہیں۔ترجمان نے بتایا کہ وزارت صحت روزانہ کی بنیاد پر صورت حال کا جائزہ لے رہی ہے اور اس کی بنا پر ہی وہ یہ فیصلہ کرے گی کہ کہاں کہاں پابندیوں کا خاتمہ ممکن ہے۔انھوں نے شہریوں اور مکینوں پر زوردیا کہ وہ اپنی بھلائی کی خاطر گھروں ہی میں مقیم رہیں اور کرونا وائرس کو مزید پھیلنے سے روکنے کے لیے سماجی میل جول میں فاصلے کو برقرار رکھیں۔