این سی او سی کا کورونا ایس او پیز پر عملدر آمد جاری رکھنے کا فیصلہ

پاکستان میں عالمی وباء کورونا وائرس سے بچاؤ کے حوالے سے فیصلہ ساز ادارے نیشنل کمانڈ اینڈ اپریشن سینٹر نے کورونا ایس او پیز پر عملدر آمد جاری رکھنے کا فیصلہ کرتے ہوئے ایس او پیز کے اطلاق کا دائرہ کار ملک کے 27 شہروں تک بڑھا دیا۔ تفصیلات کے مطابق اس سے پہلے کورونا ایس او پیز 13 شہروں میں نافذ تھیں تاہم اب کورونا پابندیاں پنجاب ، سندھ اور خیبرپختونخوا کے مزید 14 شہروں تک بڑھا دیا گیا ہے اور ایس او پیز کے اطلاق کا دائرہ کار ملک کے 27 شہروں تک کردیا گیا ہے ، جس کے تحت تجارتی سرگرمیاں رات 8 بجے بند کر دی جائیں گی ، ہفتے میں 2 دن تمام مارکیٹس بند رہیں گی ، ریسٹورنٹس میں انڈ ڈور ڈائننگ پر پابندی ہوگی ، رات 10 بجے تک آوٹ ڈور ڈائننگ کی اجازت ہوگی تاہم ٹیک اوے سروس 24 گھنٹے کھلی رہے گی۔

بتایا گیا ہے کہ کنٹیکٹ کھیلوں پر پابندی جاری رہے گی صرف ویکسی نیڈ افراد ہی انڈور جم جاسکیں گے ، انڈور شادیوں کی تقریبات پر مکمل پابندی ہوگی ، 300 مہمانوں کے ساتھ آؤٹ ڈور تقریبات کی اجازت ہوگی ، آؤٹ ڈور شادیوں کی تقریبات کے اوقات رات 10 بجے تک برقرار رہیں گے ، مزارت پرزائرین کی آمد پر پابندی جاری رہے گی ، سرکاری اور نجی دفاتر کے لیے عام دفتری اوقات کار 50 فیصد کے ساتھ جاری رہیں گے۔
این سی او سی کے مطابق پابندیوں کا اطلاق اسلام آباد اور پنجاب میں لاہور ، راولپنڈی ، گوجرانوالہ ، سرگودھا ، ملتان ، بہاولپور ، خانیوال ، خوشاب ، رحیم یار خان اور میانوالی میں ہوگا ، صوبہ سندھ میں حیدرآباد اور کراچی ، آزاد کشمیر میں مظفرآباد اور میرپور میں بھی پابندیوں کا اطلاق ہوگا ، گلگت بلتستان میں گلگت اور سکردو خیبرپختونخوا میں پشاور ، سوات ، ہری پور ، مانسہرہ، لوئر دیر، صوابی ، ایبٹ آباد اور چترال لوئر میں پابندیوں نافذ رہیں گی۔